اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور کے زیر اہتمام دسویں بین الاقوامی سیرت النبی ﷺکانفرنس کا انِقعاد وہیل چیئر ایشیا کپ: سری لنکن ٹیم کی فتح حکومت کا نیب ترمیمی بل کیس کے فیصلے پر نظرثانی اور اپیل کرنے کا فیصلہ واٹس ایپ کا ایک نیا AI پر مبنی فیچر سامنے آگیا ۔ جناح اسپتال میں 34 سالہ شخص کی پہلی کامیاب روبوٹک سرجری پی ایس او اور پی آئی اے کے درمیان اہم مذاکراتی پیش رفت۔ تحریِک انصاف کی اہم شخصیات سیاست چھوڑ گئ- قومی بچت کا سرٹیفکیٹ CDNS کا ٹاسک مکمل ۔ سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر ایکٹ کے خلاف دائر درخواستوں پر آج سماعت ہو گی ۔ نائیجیریا ایک بے قابو خناق کی وبا کا سامنا کر رہا ہے۔ انڈونیشیا میں پہلی ’بلٹ ٹرین‘ نے سروس شروع کر دی ہے۔ وزیر اعظم نے لیفٹیننٹ جنرل منیرافسر کوبطورچیئرمین نادرا تقرر کرنے منظوری دے دی  ترکی کے دارالحکومت انقرہ میں وزارت داخلہ کے قریب خودکش حملہ- سونے کی قیمت میں 36 ہزار روپے تک گر گئی۔ روس نے پیٹرول کی برآمدات پر 6 ماہ کے لیے پابندی عائد کر دی دنیا کے لیے بد صورت ترین مگر اپنے وقت کے بہترین کردار ضیاء محی الدین کی پہلی برسی "کپاس کی کاشت میں انقلابی تبدیلی وزیراعظم نے انتخابی نتائج میں تاخیر کے الزامات مسترد کر دیے بلوچستان کے علاقے پشین، قلعہ سیف اللہ میں دو بم دھماکے20 افراد جاں بحق جماعت اسلامی نے انتخابات میں دھاندلی کی صورت میں سخت مزاحمت کا انتباہ دے دیا کیا پی ٹی آئی خیبرپختونخوا کا قلعہ برقرار رکھ سکے گی؟ کراچی میں الیکشن کے انتظامات مکمل پی ٹی آئی کا 5 فروری کو نئے انٹرا پارٹی انتخابات کرانے کا اعلان

الیکشن کمیشن نے 8 فروری کو عام تعطیل کا اعلان کر دیا

یوتھ ویژن : شہزاد حُسین بھٹی سے الیکشن کمیشن آف پاکستان (ای سی پی) نے 8 فروری کو ملک میں عام انتخابات ہونے والے دن عام تعطیل کا اعلان کیا ہے۔

انتخابی نگران کی طرف سے جاری کردہ ایک نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ تمام کام کی جگہیں بشمول دفاتر اور تعلیمی ادارے – سرکاری اور نجی دونوں – اس دن بند رہیں گے۔

الیکشن باڈی نے کہا کہ یہ فیصلہ پولنگ کے دن مثبت ووٹر ٹرن آؤٹ کو یقینی بنانے کے لیے لیا گیا ہے، ووٹنگ صبح 8 بجے شروع ہوگی اور شام 6 بجے ختم ہوگی۔

اس سے قبل ای سی پی نے 8 فروری کو ہونے والے انتخابات کے لیے پولنگ بلیو پرنٹ جاری کیا۔

تفصیلی بریک ڈاؤن میں، ای سی پی نے ملک بھر میں 90,675 پولنگ اسٹیشنز کے قیام کا اعلان کیا۔ ان میں سے 522 غیر مستقل تعمیرات میں واقع ہیں۔

کل پولنگ سٹیشنز میں سے 25,320 مرد ووٹرز کے لیے، 23,950 خواتین ووٹرز کے لیے اور 41,405 مشترکہ پولنگ سٹیشنز کے طور پر مختص کیے گئے ہیں۔

پولنگ اسکیم یہ بتاتی ہے کہ صوبہ پنجاب میں 50,944 پولنگ اسٹیشنز ہیں، جن میں سے 35 اسٹریٹجک طور پر غیر مستقل عمارتوں میں واقع ہیں۔

ان سٹیشنز میں سے 14,556 مردوں کے لیے اور 14,036 خواتین کے لیے جبکہ 22,352 پولنگ سٹیشنز مردوں اور عورتوں کے لیے ہوں گے۔

اسی طرح سندھ میں 14,556 پولنگ اسٹیشنز ہیں جن میں 344 غیرمستقل عمارتوں میں رکھے گئے ہیں جبکہ خیبرپختونخوا میں مجموعی طور پر 15,697 پولنگ اسٹیشن قائم کیے گئے ہیں جن میں سے 73 غیرمستقل عمارتوں میں ہیں۔

بلوچستان میں 5,028 پولنگ اسٹیشنز ہیں جن میں سے 70 غیر مستقل عمارتوں میں تعمیر کیے گئے ہیں۔

ای سی پی نے انکشاف کیا کہ ملک بھر میں بنائے گئے 276,402 پولنگ بوتھوں میں سے 147,560 مرد ووٹرز کے لیے اور 127,842 خواتین ووٹرز کے لیے مختص کیے گئے ہیں۔ اس اسٹریٹجک تقسیم کا مقصد پورے ملک میں شہریوں کے لیے ووٹنگ کے ایک ہموار اور قابل رسائی تجربہ کو آسان بنانا ہے۔

بوتھ کے اعدادوشمار کو توڑتے ہوئے، پنجاب 149,434 بوتھس کے ساتھ سرفہرست ہے، اس کے بعد سندھ 65,005 بوتھس کے ساتھ، خیبرپختونخوا 47,081 بوتھس کے ساتھ، اور بلوچستان 14,882 بوتھس کے ساتھ سرفہرست ہے۔

واٹس ایپ ہیلپ لائن

ای سی پی نے ایک واٹس ایپ ہیلپ لائن متعارف کرائی ہے، جس کا مقصد شہریوں کو اپنی رائے شماری سے متعلق شکایات کے لیے ایک پلیٹ فارم پیش کرنا ہے۔

8 فروری کو 128 ملین سے زیادہ ووٹرز اپنا حق رائے دہی استعمال کرنے کے لیے تیار ہیں، اور عہدوں کے لیے امیدواروں کی ایک ریکارڈ تعداد، انتخابی ادارے کے اقدام کا مقصد اس اہم انتخابی دور کے دوران ایک ہموار مواصلاتی چینل کی ضرورت کو پورا کرنا ہے۔

نئی شروع کی گئی واٹس ایپ ہیلپ لائن، جو نمبر 0327 5050610 کے ذریعے قابل رسائی ہے، خاص طور پر گویائی اور سماعت سے محروم افراد کو پورا کرتی ہے، جس سے وہ ویڈیو پیغامات کے ذریعے اپنی شکایات پیش کر سکتے ہیں۔

یہ اقدام الیکشن مانیٹرنگ اینڈ کمپلینٹ سنٹر (EMCC) کا حصہ ہے جسے ECP نے عام انتخابات سے قبل ووٹروں کے خدشات کو مؤثر طریقے سے سنبھالنے اور ان سے نمٹنے کے لیے قائم کیا ہے۔ توقع ہے کہ اس اقدام سے شکایات سے نمٹنے میں قابل رسائی اور جوابدہی میں نمایاں اضافہ ہوگا۔

واٹس ایپ کے علاوہ ای سی پی نے شکایات درج کرانے کے لیے متبادل چینل بھی فراہم کیے ہیں۔ شہری اپنی شکایات شکایتوں@ecp.gov.pk پر ای میل کے ذریعے یا 111-327-000 پر وقف ہیلپ لائن کے ذریعے جمع کرا سکتے ہیں، جس سے بات چیت کے متعدد مواقع کو یقینی بنایا جا سکتا ہے۔

شکایت کے اندراج کے عمل کو ہموار کرنے کے لیے ای سی پی سیکریٹریٹ کے ساتھ ساتھ صوبائی، ڈویژنل اور ضلعی سطح کے دفاتر میں کنٹرول رومز قائم کیے گئے ہیں۔ یہ کنٹرول روم متعلقہ شہریوں کی شکایات کے اندراج اور ان کے حل میں اہم کردار ادا کریں گے۔

50% LikesVS
50% Dislikes
WP Twitter Auto Publish Powered By : XYZScripts.com