اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور کے زیر اہتمام دسویں بین الاقوامی سیرت النبی ﷺکانفرنس کا انِقعاد وہیل چیئر ایشیا کپ: سری لنکن ٹیم کی فتح حکومت کا نیب ترمیمی بل کیس کے فیصلے پر نظرثانی اور اپیل کرنے کا فیصلہ واٹس ایپ کا ایک نیا AI پر مبنی فیچر سامنے آگیا ۔ جناح اسپتال میں 34 سالہ شخص کی پہلی کامیاب روبوٹک سرجری پی ایس او اور پی آئی اے کے درمیان اہم مذاکراتی پیش رفت۔ تحریِک انصاف کی اہم شخصیات سیاست چھوڑ گئ- قومی بچت کا سرٹیفکیٹ CDNS کا ٹاسک مکمل ۔ سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر ایکٹ کے خلاف دائر درخواستوں پر آج سماعت ہو گی ۔ نائیجیریا ایک بے قابو خناق کی وبا کا سامنا کر رہا ہے۔ انڈونیشیا میں پہلی ’بلٹ ٹرین‘ نے سروس شروع کر دی ہے۔ وزیر اعظم نے لیفٹیننٹ جنرل منیرافسر کوبطورچیئرمین نادرا تقرر کرنے منظوری دے دی  ترکی کے دارالحکومت انقرہ میں وزارت داخلہ کے قریب خودکش حملہ- سونے کی قیمت میں 36 ہزار روپے تک گر گئی۔ پنجاب حکومت کا بیوروکریسی کے تبادلے نہ کرنے کا فیصلہ کارل سیگن (1934 – 1996) ایک عظیم سائنسدان فالج کے اٹیک سے پوری عمر کی معذوری ہونے سے بچائیں ڈیپارٹمنٹ آف ہارٹیکلچر فیکلٹی آف ایگریکلچر اینڈ انوائر منٹ اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور اور پاکستان سوسائٹی آف ہارٹیکلچر سائنسز کے زیر اہتمام8ویں دو روزہ انٹرنیشنل کانفرنس آل پاکستان انٹرورسٹی ریسلنگ چیمپئن شپ، اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور نے 4 کانسی اور1چاندی کامیڈل جیت لیا صدرمملکت کی منظوری کے بغیر ہی قومی اسمبلی کا اجلاس کل صبح 10 بجے طلب، نوٹیفکیشن جاری ملتان ریجن میں بجلی چوروں اور نادہندگان کے خلاف آپریشن جاری نگران وزیراعظم انوارالحق کاکڑ بلوچ لاپتہ افراد کیس میں اسلام آباد ہائیکورٹ پیش ہو گئے یادداشت کوتیز کرنے کیلئےمفید مشقیں وفاقی محتسب بہاولپورریجن میں واپڈا سمیت دیگرمحکموں کیخلاف شکایات پرعوام کو25 لاکھ روپے کاریلیف مل گیا

بلاول نے شہباز شریف کا چیلینج قبول کر لیا

یوتھ ویژن : شہزاد حُسین بھٹی سے عام انتخابات سے قبل سیاسی ٹائیٹنز کے جاری تصادم میں، پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف کی جانب سے دیے گئے مباحثے کے چیلنج کو قبول کرتے ہوئے آگے بڑھایا ہے۔

پیپلز پارٹی کے وزارت عظمیٰ کے امیدوار بلاول نے جمعہ کو چیلنج دیا تھا، جس میں تین بار کے سابق وزیر اعظم نواز شریف کے خلاف ہائی سٹیک بحث کے لیے سندھ میں تین مقامات تجویز کیے گئے تھے۔

"چونکہ میں پی پی پی کا امیدوار ہوں [آئندہ عام انتخابات میں] وزیر اعظم کے عہدے کے لیے امیدوار ہوں، [بین الاقوامی اصول یہ حکم دیتے ہیں کہ] مسلم لیگ (ن) کے امیدوار (نواز شریف) کو سامنے آنا چاہیے اور میرے ساتھ بحث میں حصہ لینا چاہیے۔ بھٹو خاندان نے اپنے آفیشل ایکس اکاؤنٹ پر چیلنج جاری کیا۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ میں مسلم لیگ (ن) کے وزارت عظمیٰ کے امیدوار نواز شریف کو دعوت دیتا ہوں کہ وہ 8 فروری سے پہلے کسی بھی وقت، کہیں بھی مجھ سے بحث کریں۔ سابق وزیر نے سابق اتحادی پارٹنر مسلم لیگ (ن) کو نشانہ بناتے ہوئے زور دے کر کہا: "وہ سیاست دان جو تین بار وزارت عظمیٰ کے عہدے پر فائز رہ چکے ہیں، وہ چوتھی بار کرسی کے لیے کوشاں ہیں۔”

نواز شریف پر واضح تنقید کرتے ہوئے بلاول نے کہا تھا کہ سابق وزیراعظم عوام کو درپیش اہم مسائل کو حل کرنے کی طرف مائل نہیں ہیں۔ انہوں نے کہا، "عالمی سطح پر صدارتی اور وزارت عظمیٰ کے امیدوار ٹیلی ویژن پر ہونے والے مباحثوں میں حصہ لیتے ہیں، جو ووٹروں کو ان کے منصوبوں کے بارے میں اہم بصیرت فراہم کرتے ہیں۔

"یہ شفافیت ووٹنگ کے عمل سے پہلے باخبر رائے دہندگان کے لیے بہت ضروری ہے۔” لفظوں کی کشمکش نے دو بڑی سیاسی جماعتوں کے درمیان شدید دشمنی میں ایک اور تہہ ڈال دی ہے کیونکہ قوم 8 فروری کو ہونے والے آئندہ انتخابات کے لیے تیار ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمت کی بجائے نواز شریف کو سندھ کے معائنے کی دعوت دی جاتی تو بہتر ہوتا۔

راولپنڈی میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے شہباز شریف نے کہا کہ ایک سیاسی رہنما اور میرے دوست نے کہا کہ وہ نواز شریف سے بحث کرنا چاہتے ہیں۔

بلاول کا براہ راست نام لیے بغیر، شہباز نے زور دے کر کہا کہ جن لوگوں کو شیر کا شکار نہ کرنے کی شکایات ہیں انہیں 8 فروری کو حقیقت کا پتہ چل جائے گا۔ مسلم لیگ (ن) سندھ میں پیپلز پارٹی کی کارکردگی کو تنقید کا نشانہ بناتی رہی ہے، جہاں وہ 15 سال سے اقتدار میں ہے۔ PDM کی قیادت والی حکومت کے خاتمے کے بعد۔

طنز سے بے خوف، بلاول نے ٹویٹر پر تیزی سے جواب دیا، بحث اور معائنہ دونوں کے لیے اپنی تیاری کا اظہار کیا۔ پی پی پی کے چیئرمین نے دوہری مقابلے کے لیے سندھ میں تین مقامات تجویز کیے: کراچی، ضلع خیرپور کی تحصیل گمبٹ، اور تھرپارکر۔

گمبٹ میں بلاول نے دعویٰ کیا کہ پنجاب کے ہسپتالوں میں مفت علاج کی پیشکش ہے۔ انہوں نے نواز شریف کو تین بار عہدہ سنبھالنے کے باوجود گمبٹ کا دورہ نہ کرنے پر تنقید کی۔

ایک اور مجوزہ مقام تھرپارکر تھا، جہاں بلاول نے انفراسٹرکچر کا معائنہ کرنے اور اس کا چولستان سے موازنہ کرنے کا مشورہ دیا۔ انہوں نے کہا کہ تھر کے انفراسٹرکچر کا بھی معائنہ کیا جائے گا۔ شریفوں پر طنز کرتے ہوئے بلاول نے کہا: "تھر کول پروجیکٹ جس کی آپ اور آپ کے بھائی نے مخالفت کی تھی، وہ نہ صرف کراچی بلکہ فیصل آباد کو بھی سستی بجلی فراہم کر رہا ہے۔”

انہوں نے کراچی میں نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیو ویسکولر ڈیزیزز (این آئی سی وی ڈی) کے آپشن کو بھی ملایا، جس نے پچھلے سال پنجاب سے 84,000 سے زائد مریضوں کے لیے اس سہولت کی خدمات کو اجاگر کیا۔

50% LikesVS
50% Dislikes
WP Twitter Auto Publish Powered By : XYZScripts.com