اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور کے زیر اہتمام دسویں بین الاقوامی سیرت النبی ﷺکانفرنس کا انِقعاد وہیل چیئر ایشیا کپ: سری لنکن ٹیم کی فتح حکومت کا نیب ترمیمی بل کیس کے فیصلے پر نظرثانی اور اپیل کرنے کا فیصلہ واٹس ایپ کا ایک نیا AI پر مبنی فیچر سامنے آگیا ۔ جناح اسپتال میں 34 سالہ شخص کی پہلی کامیاب روبوٹک سرجری پی ایس او اور پی آئی اے کے درمیان اہم مذاکراتی پیش رفت۔ تحریِک انصاف کی اہم شخصیات سیاست چھوڑ گئ- قومی بچت کا سرٹیفکیٹ CDNS کا ٹاسک مکمل ۔ سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر ایکٹ کے خلاف دائر درخواستوں پر آج سماعت ہو گی ۔ نائیجیریا ایک بے قابو خناق کی وبا کا سامنا کر رہا ہے۔ انڈونیشیا میں پہلی ’بلٹ ٹرین‘ نے سروس شروع کر دی ہے۔ وزیر اعظم نے لیفٹیننٹ جنرل منیرافسر کوبطورچیئرمین نادرا تقرر کرنے منظوری دے دی  ترکی کے دارالحکومت انقرہ میں وزارت داخلہ کے قریب خودکش حملہ- سونے کی قیمت میں 36 ہزار روپے تک گر گئی۔ عارف علوی کا اہم بیان بانی پی ٹی آئی صرف بااختیار لوگوں سے بات چیت چاہتے ہیں بلوچستان واشک میں کوئٹہ جانے والی بس کھائی میں گرنے سے 28 افراد جاں بحق 22 زخمی حکومت نے بجٹ 2024-25 میں امیروں کے لیے ٹیکس معافی واپس لینے کی تجویز پر غور کرنا شروع کردیا طوفانی بارشوں کے بعد کان کے تباہ ہونے سے 12 بھارتی ہلاک ہو گئے نیوکلیئر پاور کے حوالے سے پاکستان کی 26 سالہ یادگاری تقریب۔ اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور میں آئندہ بجٹ پر انڈسٹری اور اکیڈمیا ڈائیلاگ پیشانی کو جھوٹی و خطاء کار کیوں کہا گیا؟ بہاولپور میں باپ کے ہاتھوں کمسن بچیاں قتل خانہ کعبہ کا سونے کا دروازہ ۔ رحمت کا پرنالا اور حجر اسود پر چاندی کا خول چڑھانے کے اعزاز بھی بہاولپور کے حصے میں آیا خانہ کعبہ کے دروازے اور حجر اسود کا خول تیار کرنے والی فیکٹری کے پاکستانی مالک خالق حقیقی سے جاملے

پی ٹی آئی نے چیئرمین سینیٹ اور ڈپٹی کے انتخابات ملتوی کرنے کا مطالبہ کر دیا(2024)

پی ٹی آئی نے چیئرمین سینیٹ، ڈپٹی کے انتخابات ملتوی کرنے کا مطالبہ کر دیا(2024)

پی ٹی آئی نے انتخابات ملتوی کرنے کا مطالبہ

یوتھ ویژن : ثاقب ابراہیم غوری سے پی ٹی آئی نے چیئرمین سینیٹ، ڈپٹی کے انتخابات ملتوی کرنے کا مطالبہ کر دیا(2024)- پی ٹی آئی نے پیر کو سینیٹ کے چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے انتخاب کو خیبرپختونخوا سے خالی نشستوں پر انتخابات کے انعقاد تک مؤخر کرنے کی کوشش کی۔

پی ٹی آئی کے پانچ سینیٹرز نے اسلام آباد ہائی کورٹ (آئی ایچ سی) میں درخواست دائر کرتے ہوئے سیکرٹری سینیٹ کو خط بھی لکھا۔

سینیٹ کی 30 خالی نشستوں پر انتخابات 2 اپریل کو ہونے والے تھے۔ تاہم، الیکشن کمیشن آف پاکستان (ECP) نے مخصوص نشستوں پر اپوزیشن کے قانون سازوں کی حلف برداری پر جاری تنازعہ کے بعد کے پی سے 11 نشستوں پر انتخابات میں تاخیر کر دی تھی۔

تاہم، 19 سیٹوں پر پولنگ اب بھی جاری ہے، جس میں حکمران اتحاد نے سبھی کو جیت لیا۔ انتخابات کے بعد، کل طاقت کا گھر 66 سے بڑھ کر 85 ہو گیا، 59 سیٹیں حکمران اتحاد کے حصے میں آئیں، جس کی قیادت مسلم لیگ (ن) کر رہی تھی۔ کلین سویپ نے حکمران اتحاد کو پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں سے کسی بھی قانون کو منظور کرانے کے لیے آرام دہ پوزیشن میں ڈال دیا۔

گزشتہ رات دیر گئے صدر آصف علی زرداری نے سینیٹ کا نیا اجلاس (کل) 9 اپریل کو طلب کر لیا۔ توقع ہے کہ سینیٹ کے چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے لیے انتخابات کل ہونے والے اجلاس میں ہوں گے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل صدر مملکت نے 2 اپریل کو اسلام آباد سے ٹیکنوکریٹ کی نشست پر کامیاب ہونے والے اسحاق ڈار کو پارلیمنٹ کے ایوان بالا کے پہلے اجلاس کے لیے پریزائیڈنگ افسر مقرر کیا تھا۔

 پی ٹی آئی پی کے انٹرا پارٹی انتخابات کی توثیق

اسلام آباد ہائی کورٹ میں آج دائر درخواست میں زرقا سہروردی تیمور، فلک ناز، فوزیہ ارشد، سیف اللہ سرور خان نیازی اور سیف اللہ ابڑو نے ای سی پی، صدر اور سینیٹ سیکرٹریٹ کو مدعا علیہ نامزد کیا۔

درخواست، جس کی ایک کاپی ڈان ڈاٹ کام کے پاس دستیاب ہے، میں کہا گیا کہ سینیٹ کی خالی نشستوں پر انتخابات 2 اپریل کو نہیں ہوئے اور انہیں ملتوی کر دیا گیا۔

اس میں کہا گیا ہے کہ کے پی میں انتخابات میں تاخیر کا ای سی پی کا نوٹیفکیشن "قانونی اختیار” کے بغیر جاری کیا گیا اور "آئین کی اتنی خلاف ورزی ہے جتنا کہ ای سی پی نے اب چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے دفاتر کے انتخابات کرانے کا اعلان کیا ہے”۔

اس میں مزید کہا گیا ہے کہ یہ "بڑے پیمانے پر اطلاع دی گئی ہے کہ 9 اپریل کو ایک نامکمل سینیٹ کا اجلاس بلایا گیا ہے کہ وہ سینیٹ کی اعلی نشستوں کے لیے انتخابات کرائے جائیں”۔

اس نے موقف اختیار کیا کہ کے پی میں خالی نشستوں پر پولنگ کرائے بغیر سلاٹس کے انتخابات نہیں ہو سکتے۔

درخواست میں کہا گیا کہ آئین کے آرٹیکل 60 کے تحت چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کے عہدوں کا انتخاب سینیٹ کی تشکیل کے بعد ہی ہو سکتا ہے۔ اس میں مزید کہا گیا ہے کہ "منتظم سینیٹ کی عدم موجودگی میں چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے عہدوں کے لیے کوئی بھی انتخاب کالعدم ہو جائے گا۔”

درخواست میں کہا گیا ہے کہ انتخابی نگراں ادارے کی جانب سے کے پی میں انتخابات ملتوی کرنا "آئین کی بے توقیری کا ایک اور بدصورت مظہر ہے”۔ اس نے اصرار کیا کہ کے پی میں خالی نشستوں کے لیے انتخابات کرائے جانے اور چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے انتخاب کے لیے اجلاس طلب کیے جانے سے قبل اس کی باقاعدہ اطلاع دی جائے۔

درخواست میں IHC پر زور دیا گیا کہ کے پی میں انتخابات میں تاخیر کے ECP نوٹیفکیشن کو ایک طرف رکھا جائے اور ان انتخابات کے شیڈول کا اعلان کیا جائے اور انہیں بعد میں منعقد کیا جائے۔

اس نے یہ بھی درخواست کی کہ سینیٹ کے چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے انتخابات "9 اپریل کو ہونے والے شیڈول” کے پی میں انتخابات کے انعقاد تک ملتوی کردیئے جائیں۔

تاہم، IHC کے رجسٹرار آفس نے پی ٹی آئی کی درخواست پر اعتراض اٹھایا۔ اس میں کہا گیا ہے کہ پشاور ہائی کورٹ (پی ایچ سی) کے پی سے سینیٹ کی خالی نشستوں پر انتخابات سے متعلق کیس کی سماعت کر رہی ہے۔ اس نے پارٹی سے کہا کہ وہ پی ایچ سی سے رجوع کرے۔

مزید پڑھیں :پی ٹی آئی نے سیکرٹری سینیٹ کو خط لکھ دیا۔
علاوہ ازیں انہی 5 سینیٹرز نے سیکریٹری سینیٹ کو خط جمع کرایا جس میں چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے انتخابات ملتوی کرنے کی درخواست بھی کی گئی۔

خط، جس کی ایک کاپی ڈان ڈاٹ کام کے پاس دستیاب ہے، میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ جب تک پارلیمنٹ کے ایوانِ بالا کی کل تعداد 96 تک نہ پہنچ جائے اور کے پی میں انتخابات نہ ہو جائیں، سب سے اوپر والے حلقوں کے لیے انتخابات کا عمل شروع نہ کریں۔

"یہ ضروری ہے کہ ہم ریاست کی سالمیت اور قانونی حیثیت کو برقرار رکھنے کے لیے آئینی تقاضوں پر عمل کریں۔”

"برائے مہربانی اس معاملے کو انتہائی عجلت اور تندہی سے حل کریں تاکہ آئینی دفعات سے کوئی انحراف نہ ہو۔”

"ہم پاکستان کے آئین کے مطابق کے پی میں سینیٹ کے انتخابات ہونے تک سینیٹ کے چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے انتخابات کو ملتوی کرنے کے لیے فوری اور مناسب جواب کے منتظر ہیں۔

خط میں کہا گیا کہ ’’چونکہ آپ سینیٹ کے چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کی غیر موجودگی میں ایوان کے نگران ہیں، اس لیے آئین کو برقرار رکھنے کی ذمہ داری آپ پر عائد ہوتی ہے‘‘۔

50% LikesVS
50% Dislikes
WP Twitter Auto Publish Powered By : XYZScripts.com