آرمی چیف کی تعیناتی کی سمری پر24 گھنٹوں میں دستخط ہوجائیں گے،حکومتی ذرائع

آرمی چیف اور چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی کی سمری 24 گھنٹوں میں  دستخط کرکے صدر عارف علوی کو بھیج دی جائے گی۔

ذرائع کے مطابق نئے آرمی چیف اور چئیرمین جوائنٹ اسٹاف کمیٹی کے ناموں کی تقرری پر وزیراعظم کی مشاورت کا عمل تقریبا مکمل ہوچکا ہے، تاہم وزیراعظم شہبازشسریف کی جانب سے آج شام اتحادیوں کو اعتماد میں لیا جائے گا۔

یاد رہے اہم عسکری عہدوں پر تعیناتی کے معاملے پر وزیراعظم کی معمول کی سرگرمیاں منسوخ کردی گئیں ہیں۔

وزیر دفاع خواجہ آصف کی وزیراعظم شہباز شریف سے ملاقات ہوئی ، جس میں وزیراعظم نے آرمی چیف اور چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کے لیے بھجوائے گئے پینل کا جائزہ لیا اور وزیر دفاع نے انہیں پینل میں شامل ناموں کی پروفائل پر بریفنگ دی۔

گذشتہ روز پاک فوج کے نئے سربراہ کی تعیناتی کا معاملہ جی ایچ کیو نے سینئر ترین لیفٹیننٹ جنرلز کے نام و ڈوزیئر وزارت دفاع کو بجھوائے تھے۔

بچیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی کا تقرر بھی انہی لیفٹیننٹ جنرلز میں سے ہو گا۔

لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیر کا نام پہلے نمبر پر شامل ہے۔لیفٹیننٹ جنرل ساحر شمشاد مرزا کا نام فہرست میں دوسرے نمبر اور لیفٹیننٹ جنرل اظہر عباس سنیارٹی لسٹ میں تیسرے نمبر پر ہیں ۔

فور اسٹار جنرلز کی تعیناتیوں کی سنیارٹی لسٹ میں لیفٹیننٹ جنرل نعمان محمود چوتھے اور سابق ڈی جی آئی ایس آئی لیفٹیننٹ جنرل فیض حمید پانچویں نمبر پر ہے جبکہ لیفٹیینٹ جنرل محمد عامر کا نام چھٹے نمبر پر شامل ہے۔

آئین کے تحت مسلح افواج میں فور اسٹار تعیناتیوں کا اختیار وزیراعظم کا ہے جبکہ فور اسٹار تعیناتیوں کی رسمی منظوری صدر مملکت دیتے ہیں۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں

WP Twitter Auto Publish Powered By : XYZScripts.com