اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور کے زیر اہتمام دسویں بین الاقوامی سیرت النبی ﷺکانفرنس کا انِقعاد وہیل چیئر ایشیا کپ: سری لنکن ٹیم کی فتح حکومت کا نیب ترمیمی بل کیس کے فیصلے پر نظرثانی اور اپیل کرنے کا فیصلہ واٹس ایپ کا ایک نیا AI پر مبنی فیچر سامنے آگیا ۔ جناح اسپتال میں 34 سالہ شخص کی پہلی کامیاب روبوٹک سرجری پی ایس او اور پی آئی اے کے درمیان اہم مذاکراتی پیش رفت۔ تحریِک انصاف کی اہم شخصیات سیاست چھوڑ گئ- قومی بچت کا سرٹیفکیٹ CDNS کا ٹاسک مکمل ۔ سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر ایکٹ کے خلاف دائر درخواستوں پر آج سماعت ہو گی ۔ نائیجیریا ایک بے قابو خناق کی وبا کا سامنا کر رہا ہے۔ انڈونیشیا میں پہلی ’بلٹ ٹرین‘ نے سروس شروع کر دی ہے۔ وزیر اعظم نے لیفٹیننٹ جنرل منیرافسر کوبطورچیئرمین نادرا تقرر کرنے منظوری دے دی  ترکی کے دارالحکومت انقرہ میں وزارت داخلہ کے قریب خودکش حملہ- سونے کی قیمت میں 36 ہزار روپے تک گر گئی۔ پنجاب حکومت کا بیوروکریسی کے تبادلے نہ کرنے کا فیصلہ کارل سیگن (1934 – 1996) ایک عظیم سائنسدان فالج کے اٹیک سے پوری عمر کی معذوری ہونے سے بچائیں ڈیپارٹمنٹ آف ہارٹیکلچر فیکلٹی آف ایگریکلچر اینڈ انوائر منٹ اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور اور پاکستان سوسائٹی آف ہارٹیکلچر سائنسز کے زیر اہتمام8ویں دو روزہ انٹرنیشنل کانفرنس آل پاکستان انٹرورسٹی ریسلنگ چیمپئن شپ، اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور نے 4 کانسی اور1چاندی کامیڈل جیت لیا صدرمملکت کی منظوری کے بغیر ہی قومی اسمبلی کا اجلاس کل صبح 10 بجے طلب، نوٹیفکیشن جاری ملتان ریجن میں بجلی چوروں اور نادہندگان کے خلاف آپریشن جاری نگران وزیراعظم انوارالحق کاکڑ بلوچ لاپتہ افراد کیس میں اسلام آباد ہائیکورٹ پیش ہو گئے یادداشت کوتیز کرنے کیلئےمفید مشقیں وفاقی محتسب بہاولپورریجن میں واپڈا سمیت دیگرمحکموں کیخلاف شکایات پرعوام کو25 لاکھ روپے کاریلیف مل گیا

جہانگیر ترین نے نئی سیاسی جماعت ’استحکام پاکستان پارٹی‘ بنالی

یوتھ ویژن نیوز :  سینئرسیاستدان جہانگیر ترین نے نئی سیاسی جماعت ’استحکام پاکستان پارٹی‘ کے قیام  کااعلان کردیا۔

سینئرسیاستدان جہانگیرترین کا پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہنا تھاکہ  نئی سیاسی پارٹی استحکام پاکستان پارٹی کی بنیاد رکھنے آئے ہیں۔میں سب لوگوں کو خوش آمدید کہتا ہوں ۔ہمارا ملک نازک دور سے گزر رہاہے ہمیں نئی جماعت بنانے کی ضرورت کیوں پیش آئی؟سیاست میں آنے سے لیکر میرا ایک مقصد یہ رہا کہ ملک کی ترقی میں اپنا حصہ ڈالو۔اس سفر میں مجھے بہت سے لوگوں کے ساتھ ملنے اور کام کرنے کا موقع ملا اور میں نے ان کے تجربے سے بہت کچھ سیکھا ۔میں ایک روایتی سیاستدان نہیں تھا صرف کسی مقصد کی وجہ آیا ۔اسی جذبے کی وجہ سے تحریک انصاف میں شامل ہوا ۔مجھے یقین تھا کہ اصلاحات لائیں گے جس کی پاکستان کو ضرورت ہے اس وجہ سے تحریک انصاف کو مضبوط سیاسی قوت بنانے کیلئے بھرپور کردار اداکیا ۔یہ سب لوگ اس جدوجہد میں شامل تھے ۔

سینئرسیاستدان جہانگیرترین کا مزید کہنا تھا کہ 2013کے الیکشن کے بعد تحریک انصاف میں ایک جذبہ پیدا کیا ۔آنیوالے دنوں میں چند حقائق سامنے آئیں گے جس سے معلوم ہوگا کہ تحریک انصاف کیلئے کیسی محنت کی ۔تاکہ پارٹی جیتے اور ملک میں اصلاحات لانے کا کام بھی کیا جا سکے ۔

جہانگیرترین کاکہنا تھا کہ پاکستان میں اصلاحات لانا ہمارا بنیادی اصول تھا ۔بدقسمتی سے ایسا نہ ہو سکا معاملات ایسے نہ چل سکے جیسے چاہتے تھے اور لوگ بددل ہونا شروع ہو گئے۔حالانکہ تحریک انصاف کا منشور معیشت کودرست ،احتساب اور دوست ممالک سے بہتر تعلقات قائم کرنا تھا مگر ایسا نہ ہو سکا اور معاملات بگڑ گئے۔

سینئرسیاستدان جہانگیرترین  کا مزید کہنا تھا کہ 9مئی کوفوجی تنصیبات پرحملے ہوئے ۔ ہم نے 9مئی کے منصوبہ سازوں کو کیفرکردار تک پہنچاناہوگا۔ایم ایم عالم کے جہاز کو بھی جلا دیا ۔ایسی مثال قائم کرنا ہوگی کہ کل کو کوئی فوجی تنصیبات پرحملہ کرنے کی جرات نہ کر سکا ۔تشویشناک صورتحال سے عوام کی امیدیں دم توڑ گئیں۔ہم ملک کر پاکستان کے مسائل کو دلدل سے نکالنے کی سنجیدہ کوشش کرنا چاہتے ہیں۔

جہانگیرترین کا کہنا تھا کہ ہمارے ملک کو ایسی قیادت کی ضرورت ہے جو اتحاد اور رواداری کو بڑھائیں ۔قوم ایک عروج پرپہنچے گی ۔اس وجہ سے نئی جماعت کا سنگ بنیاد رکھ رہے ہیں ۔آج تمام لوگ چاہتے ہیں کہ ملک کو ترقی کی راہ پر گامزن کیا جا سکے ہماری سیاست کو ایک نئی سمجھ کی ضرورت ہے ۔ہمارا جمہوری نظام اسی صورت مضبوط ہو سکتا ہے جب حکومت اور اپوزیشن اپنی آئینی ذمہ داری کو سمجھے اور عمل پیرا بھی ہوں۔

آنیوالے دنوں میں ہماری جماعت میں اور بھی لوگ شامل ہوں گے جن کا ووٹ بینک بھی ہے ۔

سینئرسیاستدان جہانگیرترین کا کہنا تھا کہ ہم اپنا انتخابی ایجنڈا منظرعام پر لائیں گے ۔میں پرامید ہیں کہ انتخابات میں بہتر نتائج حاصل کر سکیں گے ۔ہم نے آئی ٹی سیکٹر کو اٹھانا ہے ۔کسان کو مضبوط کرنا ہے ۔جماعت کا مقصد نوجوانوں کے امنگوں کی ترجمانی کرنا ہے ۔اقلیتوں کا تحفظ کریں گے۔معاشرے کے کمزور طبقات کی آواز بنیں گے ۔جماعت ترقی اور خوشحالی کی علامت ہوگی۔

سابق وزیر عبدالعلیم خان کاکہنا تھا کہ تمام درد دل رکھنے والے پاکستانی یہاں موجود ہیں۔دوستوں نے اکٹھے ہو کر الگ پارٹی کے قیام کا فیصلہ کیا ۔اپنے بڑے بھائی جہانگیرترین کا شکریہ ادا کیا کہ ہمارے ساتھ مشاورت کرنے میں بڑے پن کا مظاہرہ کیا یہ آج انہی کی سیاسی بصیرت اور محبت کی وجہ ہے کہ ہم ایک ہی پلیٹ فارم پراکٹھے نظر آرہے ہیں۔خاص طورپرایک بات کہنا چاہتا ہوں کہ ہم نے گزشتہ 12سال ایک ہی پلیٹ فارم پر اکٹھے گزارے اور سب دوست اس جدوجہد کاحصہ رہے کسی نے 30سال کسی نے 10سال لگائے لیکن ہم سب نے اس خوشحال اور نئے پاکستان کا خواب دکھایا گیا تھا ہم جو کچھ کر سکتے تھے کیا اور اپنا حصہ ڈالا ۔

عبدالعلیم خان کا کہنا تھا کہ آج کے حالات میں ہم سمجھتے ہیں کہ پاکستان کے مسائل کا حل ترقی یافتہ پاکستان بنانا ہے پاکستان کو انتشار سے دور کرنا ہے ۔انتشار پاکستان کو تیزی سے کھوکھلا کررہاہے یہ انتشار پاکستان کی آئندہ آنیوالی نسلوں کیلئے بری خبر ہے اور ہم نے اس انتشار کو ختم کرنا ہے ۔ایک ایسا مستحکم پاکستان بنانا ہے جس میں تمام ادارے ایک پیج پر ہوں اور مکمل ہم آہنگی سے درست فیصلے کریں تاکہ ملک ترقی کی راہ پر گامزن ہوں۔ہم نے فیصلہ کیا کہ جہانگیرترین کی قیادت میں ایک پلیٹ فارم پر اکٹھے ہوں گے ۔پارٹی میں شامل ہونیوالے سابق وزرا،ارکان اسمبلی کا شکریہ ادا کرتا ہوں ہمارا جذبہ بڑھ گیا ہے اور ہم اکٹھے ہو کر جہانگیرترین کی سربراہی میں نئی جدوجہد میں حصہ ڈالیں گے ۔لاہور کے مقامی ہوٹل میں ہونے والی اس پریس کانفرنس سے قبل پارٹی کےکور گروپ کا اجلاس ہوا جس کی صدارت پارٹی کے پیٹرن ان چیف جہانگیرترین اورعبدالعیم خان نے کی۔اجلاس میں پریس کانفرنس کے نکات اور منشور پر مشاورت  کی گئی۔

ذرائع کے مطابق عمران اسماعیل، علی زیدی، فواد چوہدری، عامرکیانی، محمودمولوی، جے پرکاش، مرادراس اور فردوس عاشق اعوان نئی جماعت کاحصہ ہوں گے۔

50% LikesVS
50% Dislikes
WP Twitter Auto Publish Powered By : XYZScripts.com