اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور کے زیر اہتمام دسویں بین الاقوامی سیرت النبی ﷺکانفرنس کا انِقعاد وہیل چیئر ایشیا کپ: سری لنکن ٹیم کی فتح حکومت کا نیب ترمیمی بل کیس کے فیصلے پر نظرثانی اور اپیل کرنے کا فیصلہ واٹس ایپ کا ایک نیا AI پر مبنی فیچر سامنے آگیا ۔ جناح اسپتال میں 34 سالہ شخص کی پہلی کامیاب روبوٹک سرجری پی ایس او اور پی آئی اے کے درمیان اہم مذاکراتی پیش رفت۔ تحریِک انصاف کی اہم شخصیات سیاست چھوڑ گئ- قومی بچت کا سرٹیفکیٹ CDNS کا ٹاسک مکمل ۔ سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر ایکٹ کے خلاف دائر درخواستوں پر آج سماعت ہو گی ۔ نائیجیریا ایک بے قابو خناق کی وبا کا سامنا کر رہا ہے۔ انڈونیشیا میں پہلی ’بلٹ ٹرین‘ نے سروس شروع کر دی ہے۔ وزیر اعظم نے لیفٹیننٹ جنرل منیرافسر کوبطورچیئرمین نادرا تقرر کرنے منظوری دے دی  ترکی کے دارالحکومت انقرہ میں وزارت داخلہ کے قریب خودکش حملہ- سونے کی قیمت میں 36 ہزار روپے تک گر گئی۔ روس نے پیٹرول کی برآمدات پر 6 ماہ کے لیے پابندی عائد کر دی دنیا کے لیے بد صورت ترین مگر اپنے وقت کے بہترین کردار ضیاء محی الدین کی پہلی برسی "کپاس کی کاشت میں انقلابی تبدیلی وزیراعظم نے انتخابی نتائج میں تاخیر کے الزامات مسترد کر دیے بلوچستان کے علاقے پشین، قلعہ سیف اللہ میں دو بم دھماکے20 افراد جاں بحق جماعت اسلامی نے انتخابات میں دھاندلی کی صورت میں سخت مزاحمت کا انتباہ دے دیا کیا پی ٹی آئی خیبرپختونخوا کا قلعہ برقرار رکھ سکے گی؟ کراچی میں الیکشن کے انتظامات مکمل پی ٹی آئی کا 5 فروری کو نئے انٹرا پارٹی انتخابات کرانے کا اعلان

فضل الرحمان اورنوازشریف نےعمران خان سےکسی بھی قسم کے مذاکرات کرنےسےانکارکردیا

یوتھ ویژن نیوز : مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف اور پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے عمران خان سے کسی بھی قسم کے مذاکرات سے سختی سے انکار کردیا۔

 تفصیلات کے مطابق اسلام آباد (ایاز شجاع) مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف اور پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے اتفاق کیا ہے کہ عمران خان اور چیف جسٹس کا کوئی دباؤ قبول نہیں کیا جائے گا۔ حکومت جاتی ہے تو جائے انتخابات ایک ہی دن اور اکتوبر میں ہوں گے۔ 

 دونوں رہنماؤں کا کہنا ہے کہ نواز شریف اور فضل الرحمان موجودہ سیاسی و آئینی صورتحال پر سیاسی قربانی دینے کیلئے تیار ہیں۔ کسی بلیک میلنگ میں آئیں گے اور نہ ہی پی ٹی آئی سے مزید مذاکرات کیے جائیں گے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ پی ڈی ایم شہبازشریف حکومت کو قربان کرنے کے لیے تیار ہے ۔اصولی موقف سے پیچھے نہیں ہٹیں گے۔  انتخابات ایک روز اور قبل ازوقت حکومت تحلیل نہیں ہوگی ۔   دونوں رہنماؤں کا کہنا ہے کہ عمران خان سے مزید کوئی مذاکرات نہیں ہونگے ۔ حکومت مدت پوری کرے گی ۔ عدلیہ کے فیصلوں کا احترام مگر قانونی و آئینی راستہ اختیار کریںگے ۔ اب مذکرات نہیں ہوںگے،حالات کا سامنا کریںگے

50% LikesVS
50% Dislikes
WP Twitter Auto Publish Powered By : XYZScripts.com