اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور کے زیر اہتمام دسویں بین الاقوامی سیرت النبی ﷺکانفرنس کا انِقعاد وہیل چیئر ایشیا کپ: سری لنکن ٹیم کی فتح حکومت کا نیب ترمیمی بل کیس کے فیصلے پر نظرثانی اور اپیل کرنے کا فیصلہ واٹس ایپ کا ایک نیا AI پر مبنی فیچر سامنے آگیا ۔ جناح اسپتال میں 34 سالہ شخص کی پہلی کامیاب روبوٹک سرجری پی ایس او اور پی آئی اے کے درمیان اہم مذاکراتی پیش رفت۔ تحریِک انصاف کی اہم شخصیات سیاست چھوڑ گئ- قومی بچت کا سرٹیفکیٹ CDNS کا ٹاسک مکمل ۔ سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر ایکٹ کے خلاف دائر درخواستوں پر آج سماعت ہو گی ۔ نائیجیریا ایک بے قابو خناق کی وبا کا سامنا کر رہا ہے۔ انڈونیشیا میں پہلی ’بلٹ ٹرین‘ نے سروس شروع کر دی ہے۔ وزیر اعظم نے لیفٹیننٹ جنرل منیرافسر کوبطورچیئرمین نادرا تقرر کرنے منظوری دے دی  ترکی کے دارالحکومت انقرہ میں وزارت داخلہ کے قریب خودکش حملہ- سونے کی قیمت میں 36 ہزار روپے تک گر گئی۔ پنجاب حکومت کا بیوروکریسی کے تبادلے نہ کرنے کا فیصلہ کارل سیگن (1934 – 1996) ایک عظیم سائنسدان فالج کے اٹیک سے پوری عمر کی معذوری ہونے سے بچائیں ڈیپارٹمنٹ آف ہارٹیکلچر فیکلٹی آف ایگریکلچر اینڈ انوائر منٹ اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور اور پاکستان سوسائٹی آف ہارٹیکلچر سائنسز کے زیر اہتمام8ویں دو روزہ انٹرنیشنل کانفرنس آل پاکستان انٹرورسٹی ریسلنگ چیمپئن شپ، اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور نے 4 کانسی اور1چاندی کامیڈل جیت لیا صدرمملکت کی منظوری کے بغیر ہی قومی اسمبلی کا اجلاس کل صبح 10 بجے طلب، نوٹیفکیشن جاری ملتان ریجن میں بجلی چوروں اور نادہندگان کے خلاف آپریشن جاری نگران وزیراعظم انوارالحق کاکڑ بلوچ لاپتہ افراد کیس میں اسلام آباد ہائیکورٹ پیش ہو گئے یادداشت کوتیز کرنے کیلئےمفید مشقیں وفاقی محتسب بہاولپورریجن میں واپڈا سمیت دیگرمحکموں کیخلاف شکایات پرعوام کو25 لاکھ روپے کاریلیف مل گیا

کمراٹ میں پھنسے سیاحوں کی دہائی، لڑکی نے انتظامیہ کی بےحسی کا پول کھول دیا

یوتھ ویژن نیوز ( ویب ڈسک ) حالیہ بارشوں اور ندی نالوں میں طغیانی کی وجہ سے ملکی تاریخ کے بدترین سیلاب نے تباہی مچا رکھی ہے۔ پنجاب سے طلباء کا ایک گروہ سیروسیاحت کے لیے کمراٹ گیا۔ جہاں وہ شدید بارشوں اور راستے منقطع ہونے کی وجہ سے پھنس گیا۔ 

سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہورہی ہے، جس میں ان طلباء کے گروہ کو دکھایا جارہا ہے۔ جن میں لڑکیوں کی بھی ایک تعداد کھلے آسمان تلے زندگی گزارنے پر مجبور ہے۔ 

ویڈیو میں ایک لڑکی پیغام دے رہی ہے کہ وہ دو دن سے کھلے آسمان تلے بارش میں پھنسے پڑے ہیں لیکن ان کو بچانے والا کوئی نہیں ہے۔ پیغام میں اس کا مزید کہنا ہے کہ گزشتہ دو دن سے انہوں نے انتظامیہ کو جتنے فون کرنے تھے یا کروانے تھے کروا کر دیکھ لیے لیکن ان کو بچانے کوئی نہیں آیا۔ کیا حکومت سو رہی ہے؟ کوئی بھی نہیں آرہا۔

انہوں نے کہا کہ ان کے پاس پینے کا پانی ختم ہوچکا ہے، غذائی قلت کا بھی سامنا ہے اور وہ بہت ناامید ہوچکے ہیں۔ آخر میں وہ کہتی ہے کہ اب ان کی آخری امید سوشل میڈیا ہے کیونکہ نہ جانے کل تک وہ لوگ رہتے بھی ہیں یا نہیں۔ 

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں

WP Twitter Auto Publish Powered By : XYZScripts.com