ایران نے افغانستان میں زلزلے سے متاثرین کے لئے امداد فراہم کرنے کا اعلان کردیا

ایران نے کہا ہے کہ وہ افغانستان میں زلزلے سے متاثر ہونے والوں کی ہر ممکن مدد کیلئے تیار ہے۔

اسلامی جمہوریہ ایران نے افغانستان میں زلزلے میں قیمتی جانوں کے نقصان پر گہرے دکھ کا اظہار کیا ہے.

ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان سعید خطیب زادہ نے زلزلے میں جاں بحق ہونے والوں کے لواحقین سے ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ایران، زلزلے سے متاثرہ علاقوں اور متاثرین کے لئے ہر طرح کی امداد فراہم کرنے کے لئے تیار ہے۔

ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے افغان عوام اور حکومت کو بھی زلزلے میں ہونے والے جانی نقصانات پر تعزیت پیش کی۔

در ایں اثناء اسلامی جمہوریہ ایران کی ہلال احمر کے سربراہ پیر حسین کولیوند نے بھی افغانستان میں زلزلے سے متاثرہ علاقوں اور متاثرین کے لئے امداد فراہم کرنے کے لئے مکمل آمادگی کا اعلان کیا ہے۔

کابل میں ایرانی سفارتخانے نے افغان وزارت خارجہ سے کہا ہے کہ ایران کی جمعیت ہلال احمر ہر طرح کی امداد کے لئے تیار ہے۔

طالبان انتظامیہ نے بھی عالمی برادری سے مدد کی اپیل کی ہے۔

قابل ذکر ہے کہ کل آدھی رات کو افغانستان میں 6.1 شدت کا زلزلہ آیا جس نے اس ملک میں تباہی مچا دی ۔ زلزلے سے کچے مکانات گر گئے اور زمین میں دراڑیں پڑگئیں۔

افغانستان طالبان حکومت کی وزارت داخلہ میں ڈیزاسٹر مینجمنٹ کے ڈائریکٹرشرف الدین مسلم نے مختلف علاقوں میں زلزلے سے 950 افراد کی اموات کی تصدیق کردی ۔ زلزلے سے 610 سے زائد افراد زخمی ہوئے ہیں۔ زلزلے سے سب سے زیادہ تباہی صوبہ پکتیکا میں ہوئی جہاں اب تک کی اطلاعات کے مطابق 100 سے زائد افراد جاں بحق ہوچکے ہیں ۔ زلزلے سے اموات میں اضافے کا خدشہ ظاہرکیا گیا ہے۔

زلزلے کا مرکز خوست شہر سے 27 میل دور تھا اوراس کی گہرائی 31 میل تھی۔ زلزلے کے جھٹکے افغان دارالحکومت کابل کے علاوہ ایران اور پاکستان میں میں بھی محسوس کئے گئے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں

WP Twitter Auto Publish Powered By : XYZScripts.com